rawalpindi-rates 22

اشیاءخو ردونوش ر یٹ لسٹ جاری

اشیاءخو ردونوش ر یٹ لسٹ جاری
چاول(ایری) کی قیمت 50روپے فی کلو،
با سمتی چا ول (پرانے) 130 روپے فی کلو،دال چنا(موٹی)115روپے فی کلو، دال چنا(بار یک)105روپے فی کلو، دال مسور(موٹی)80روپے فی کلو،
دال ماش(ثا بت)115 روپے کلو، دال ماش (کرم)145 روپے کلو،دال مو نگ 100روپے کلو، سفید چنا(موٹا) 150روپے کلو، سفید چنا(با ر یک) 110 روپے کلو قیمت قرار پا ئی ہے۔اسی طرح تندوری روٹی کی قیمت07 روپے ور نان کی قیمت10 روپے قرار پا ئی ہے
راولپنڈی(پی این این )ایڈ یشنل ڈپٹی کمشنر(فنا نس اینڈ پلا ننگ)را نا و قا ص احمد نے ڈسٹر کٹ پرائس کنٹرول کے اجلاس کے دوران اشیا ء
خو ردونوش کی آسان و مناسب نر خوں پر دستیابی کو یقینی بناکر عوا م الناس کو ر یلیف فراہم کرنے کے لئے ر یٹ لسٹ کو فائنل کر تے ہو ئے کہا ہے کہ یہ ر یٹ ضلع را ولپنڈی کی حد ودمیں مو جو د تمام سٹورز و دکانوں پر لا گو ہوں گے اور دکا نداروں کی لئے ضروری ہے کہ اس ر یٹ لسٹ کو اپنی دکان پر نمایاں جگہ پر آویزاں کر یں۔ اس سلسلے میں گز شتہ برس کی ر یٹ لسٹ میں تبد یلی کر تے ہوئے چاول(ایری) کی قیمت 50روپے فی کلو،
با سمتی چا ول (پرانے) 130 روپے فی کلو،دال چنا(موٹی)115روپے فی کلو، دال چنا(بار یک)105روپے فی کلو، دال مسور(موٹی)80روپے فی کلو،دال ماش(ثا بت)115 روپے کلو، دال ماش (کرم)145 روپے کلو،دال مو نگ 100روپے کلو، سفید چنا(موٹا) 150روپے کلو، سفید چنا(با ر یک) 110 روپے کلو قیمت قرار پا ئی ہے۔اسی طرح تندوری روٹی کی قیمت07 روپے ور نان کی قیمت10 روپے قرار پا ئی ہے۔سفید آٹا20 کلو گرام تھیلے کی قیمت اور ویجیٹبل گھی کی قیمت حکومتی نو ٹیفیکیشن کے مطابق قرار وا قعی پا ئی جبکہ بقیہ اشیاء کی قیمتیں گز شتہ برس والی ہی قا ئم ر ہیں گی۔اجلاس میں منڈیوں میں پھلوں اور سبزیوں کے ہول سیل اور پرچون نرخوںکو بھی طے کیا گیا ۔اجلاس میں اسسٹنٹ کمشنر(کینٹ) زا ہد خان، اے سی (صدر) عمر شیرا زی ، اے سی (سٹی) نعیم افضل ،اے سی (کہوٹہ)ظہیر احمد، اے سی (ہیڈ کو اٹر) اشعر اقبال، اے سی(کوا ڈ ینیشن)حید ر عبا س،ڈسٹر کٹ آفیسر آئی پی ڈ یبلیو ایم مظفر حسین، صدر انجمن تاجران شا ہد غفور پرا چہ، میاں صد یق، افضال کسانہ سیکرٹری ما ر کیٹ کمیٹی آڑ ھتیوں و د یگر متعلقہ افراد کی بڑی تعداد بھی اجلاس میں موجود تھی۔اے ڈی سی (فنا نس اینڈ پلا ننگ)را ناوقا ص احمد نے مز ید کہا کہ اگر چہ پھلوں اور سبزیوں کی قیمتوں میں اُتار چڑھائو ڈیمانڈ اور سپلائی سے منسلک ہے تاہم انتظامیہ کی طرف سے ذخیرہ اندوزی ، گراں فروشی اور مصنوعی مہنگائی پیدا کرنے کے خلاف بلاامتیازکاروائی کی جائے گی اور اس سلسلے میں مجسٹریٹ صاحبان منڈیوں، مارکیٹوں اور بازاروں کے دورے کر رہے ہیں تا کہ گراں فروشی کا موجب بننے والے آڑھتیوں اور دکانداروں کے خلاف سخت قانونی کاروائی عمل میں لائی جائے گی او رجو افراد شہریوں کے لئے مشکلات پیدا کررہے ہیں انہیں قرار واقعی سزائیں دی جائیں گی۔
ڈسٹر کٹ پرائس کنٹرول اجلاس اشیاءخو ردونوش ر یٹ لسٹ جاری

اس خبر پر اپنی رائے کا اظہار کریں

اپنا تبصرہ بھیجیں