imam-hassan-youm-shahadat 13

سیرت مصطفی و مجتبیٰ ؑ امن عالم کا منشور ہے

سیرت مصطفی و مجتبیٰ ؑ امن عالم کا منشور ہے
ظمت مصطفیٰ و مجتبیٰ کی مناسبت سے بدھ کووصال النبی ؐاور حضرت امام حسن مجتبیٰ کا یوم شہادت مذہبی جذبے اور عقیدت و احترام کیساتھ منایا گیا
اسلام آباد(پی این این) قائد ملت ِجعفریہ آغاسیدحامدعلی شاہ موسوی کے اعلان کے مطابق عالمگیرہفتہ عظمت مصطفیٰ و مجتبیٰ کی مناسبت سے بدھ کووصال النبی ؐاور شہزادہ سبز قبا حضرت امام حسن مجتبیٰ کا یوم شہادت مذہبی جذبے اور عقیدت و احترام کیساتھ منایا گیا۔علمائے کرام ، واعظین اور ذاکرین نے مجالس سے خطاب کرتے ہوئے اسوہِ محمد و آل محمدؐ کو بہترین اور مکمل ضابطہ حیات قراردیا ۔اس موقع پرالمرتضیٰ میںتحریک نفاذفقہ جعفریہ پاکستان کے سیکرٹری جنرل سیدشجاعت بخاری نے مجلس سے خطاب کرتے ہوئے کہاکہ سیرت مصطفی و مجتبیٰ ؑ امن عالم کا منشور ہے دہشت گرد عالم اسلام نہیں استعمار کی پیداوار ہیں ایران پر پابندیاں عالمی قوانین کی توہین ہے مسلم ممالک متحد نہ ہوئے تو وہ وقت دور نہیں کہ امریکہ یہی کھیل سعودی عرب ترکی پاکستان سمیت ہر مضبوط اسلامی ملک کیخلاف کھیلے گا گریٹر اسرائیل اور اکھنڈ بھارت کیلئے شیطانی قوتیں دیوانی ہو ئی چلی جارہی ہیں، مسلم ممالک اپنی خیر منائیں، مسلم ممالک کو بلاکس میں تقسیم کرکے آسان شکار بنانا امریکی ایجنڈا ہے مسلمانوں کا بچاؤ صرف اتحاد میں ہے،دوستوں کو شہ دے کر دلدل میں دھکیلنا اور پھر انہیں گھیر مارنا امریکی روش ہے، صیہونی و استعماری سازشوں کے مقابلہ کیلئے امت مسلمہ کو خانوادہ رسول کی سیرت کو مشعل راہ بنانا ہوگا۔انہوں نے کہا کہ دنیاکودرپیش دہشت گردی اوربدامنی سے نجات حاصل کرنے کیلئے سیرت نبویؐ اوراسوہ حضرت امام حسن مجتبیٰ ؑ کی عملی پیروی وقت کی اہم ترین ضرورت ہے۔انہوں نے کہاکہ ہمیں پاکیزہ ہادیان دین کے نقش قدم پرچلتے ہوئے اپنے مسائل و مصائب کے خاتمے کیلئے افہام تفہیم کی پالیسی اختیارکرناہوگی۔سیدشجاعت بخاری نے کہاکہ دانائے کل ختم الرسل ؐ ایسے دورمیں تبلیغ توحیدورسالت پرمامورکئے گئے جب ظلم وبربریت جبرواستبداداورجہالت وگمراہی کی کالی گھٹائیں پورے عالم کی فضائوں پرچھائی ہوئی تھیں،توحیدشناسی کی آوازیں خاموش تھیں ، دنگاوفسادجدل وجدال کادوردورتھا، بیگناہ زندہ درگورکی جانے والی معصوم بیٹیوں کی فریادوں اورگریہ و بکاکے سواکچھ نہ سنائی دیتاتھا، غربت وافلاس، محرومیت ، حق تلفی اورصرف اپنے لئے حصول منفعت کی کوششیں ، لوٹ کھسوٹ ، محروموں اورمظلوموں کو مزیدضررپہنچانے کی تدبیریں عروج پرتھیں غرضیکہ پوراجزیرہ عرب ضلالت وپستی ذلت ورسوائی میں گھرچکاتھااوراس کے گہرے گڑھے میں گرچکاتھا۔ انہوں نے کہاکہ ایسی وحشت آمیزفضاء میں پیغمبراسلام کی تبلیغ نے پورے عالم کوتبدیل کردیا۔آپ ؐ اپنے 23سالہ دورِحیات میں انسانیت کواعلیٰ ترین منزل اوراخلاق کریمہ کی عزت دلانے کامیاب وسرفرازہوئے اورنظام عدلت الہیہ کی طرف رہنمائی فرمائی ۔ پھروہ وقت آیاکہ جب یہ آیت نازل ہوئی کہ آج دین مکمل اورنعمتیں تمام ہوگیئں ۔انہوں نے کہاکہ اسی دین اسلام کے تحفظ کی پاداش میں اہلبیت ؑرسالتؐ کے عظیم فردحضرت امام حسن مجتبیٰ جنہیں آیہ مباہلہ کے روح سے فرزندِرسولؐ ہونے کاشرف حاصل ہے نے جام شہادت نوش کیاآپ نے اپنے نانامحمدؐ کی تاسی میں صلح کرکے بتایاکہ اسلام صلح کوجنگ پرترجیح دیتاہے۔انہوں نے خانوادہِ رسالت ؐ کی سیرت وتعلیمات پرعمل پیراہوکرپوری دنیاکوامن کاگہوارہ بنایاجاسکتاہے۔

اس خبر پر اپنی رائے کا اظہار کریں

اپنا تبصرہ بھیجیں