pothwarolivefarming 47

پوٹھوہار کو زیتون کی وادی قرارزیتون کی کاشت ٹریننگ ورکشا پ

پوٹھوہار کو زیتون کی وادی قرارزیتون کی کاشت ٹریننگ ورکشا پ
زیتون کی کاشت سے کسان اپنی معاشی ضروریات پوری کر سکتا ھے
راولپنڈی (پی این این )پراجیکٹ ڈائریکٹر زیتون پاکستان ایگریکلچر ریسرچ کونسل اسلام آباد ڈاکٹر محمد طارق نے کہا ہے کہ پوٹھوہار کو زیتون کی وادی قرار دیا گیا ہے اور اس مقصد کے لئے بارانی ریسرچ انسٹی ٹیوٹ چکوال کے ساتھ مل کر زیتوں کی کاشت 249 اس کی نگہداشت اور مارکیٹنگ کے لئے اعلی سطح پر سرگرمیوں کو فروغ دینے کے لئے موثر اقدامات عمل میں لائے جارہے ہیں اور کاشتکاروں کو زیتون کی کاشت کے لئے ہر ممکن تعاون اور امداد فراہم کی جارہی ہے ۔
انہوں نے ان خیالات کا اظہار آج زیتون کی کاشت اور اس کی مارکیٹنگ کے حوالے سے منعقدہ ایک روزہ ٹریننگ ورکشا پ میں بطور مہمان خصوصی اپنے خطاب میں کیا۔یہ ورکشاپ مقامی ہوٹل میں منعقد ہوئی جس میں ڈاکٹر محمد اشرف چیئرمین پی سی آر ڈبلیو آر249 ڈاکٹر عظیم طارق پراجیکٹ ڈائریکٹر بارانی ریسرچ انسٹی ٹیوٹ (باری) چکوال 249 سید یوسف علی شاہ آلیو فاؤنڈیشن 249غلام اسحق
یو ایس ایڈ پنجاب انیبلنگ انوائرمنٹ پراجیکٹ 249 واٹر منیجمنٹ کے ڈپٹی ڈائریکٹر راولپنڈی ملک محمد وارث249 دیگر متعلقہ محکموں کے ا فسران 249 فارم اونر ملک عباد علی249 ملازم حسین اور پنجاب اور کشمیر سے آئے ہوئے دیگر فارمرز نے شرکت کی ۔
ورکشاپ سے خطاب کرتے ہوئے ڈاکٹر محمد طارق نے کہا ہے کہ زیتون کی دنیامیں ضرورت اور مانگ کے پیش نظر یہ ایک ایسی فارمنگ ہے جس سے کسان اپنی معاشی ضروریات پوری کرنے کے ساتھ ساتھ اسے آنے والی نسلوں کے لئے ایک تحفہ دے کر جاسکتا ہے اور جو اس کے لئے دنیا میں کامیابی کے ساتھ ساتھ نیکی کا بھی ایک ذریعہ ہے ۔اس موقع پر ماہرین نے زیتون کی کاشت کے حوالے سے درپیش مشکلات کے حل 249 اس کی نگہداشت اور مارکیٹنگ کے حوالے سے اپنے اپنے لیکچرز دیئے اور تیل کے علاوہ اس کے دیگر استعمال اور اس کی افادیت پر روشنی ڈالی ۔ورکشاپ کے انعقاد کو زیتون فارمرز بے حد سراہا اور ورکشاپ کے اختتام پر شرکاء میں سرٹیفیکیٹ بھی تقسیم کئے گئے ۔
پوٹھوہار کو زیتون کی وادی قرارزیتون کی کاشت ٹریننگ ورکشا پ

کیٹاگری میں : صحت

اس خبر پر اپنی رائے کا اظہار کریں

اپنا تبصرہ بھیجیں