kallrsyedanpolicecaughtnosarbaz 46

کلر سیداں2 نوسرباز ٹھگ پیرگرفتار

کلر سیداں2 نوسرباز ٹھگ پیرگرفتار
تھانہ کلر سیداں پولیس نے 2 جعلی نوسرباوزوں پیروں کو گرفتار کر کےدو روزہ جسمانی ریمانڈ حاصل کر لے تفتیش شروع کر دی۔جعلی پیر نے بیمار شخص کو دم درود کرنے کے ذریعے مدعی کے بھتیجے کو صحتیاب کرنے کے بدلے 48 لاکھ کی خطیر رقم ہڑپ کر لی۔مدعی تعمیر حسین سکنہ ولائیت آباد تحصیل کلر سیداں نے اپنے بھتیجے محمد ضمیر جو کہ ذہینی مریض تھاکی صحت یابی کے لئیے ملزمان سید نزاکت حسین شاہ اور سید قیصر علی شاہ سے رابطہ کیا جنہوں نے کہ ہم دم درود کے ذریعے تمہارے بھتیجے کا علاج کریں گئے اور وہ صحتیاب ہو جائے گا۔ملزمان نے اسے بتایا کہ ہم یہاں دربار تعمیر کریں گئے اس کے لئیے کچھ رقم بطور امانت دو جو ہم واپس کر دیں گئے۔جس پر تعمیر حسین نے مبلغ 40 لاکھ روپےامانتا ان کے حوالے کی۔لیکن مریض صحت یاب نہ ہو سکا۔جس پر مریض کے چچا نے دوبارہ جعلی پیروان سے رابطہ کیا جس پر ملزمان نے مزید 8 لاکھ کی رقم لانے کا مطالبہ کیا کہ ہم پڑھائی کر رہے ہیں۔مریض ٹھیک ہو جائے گا مگر مریض تندرست نہ ہوا۔جس پر مدعی نے امانتا دی ہوئی رقم کی واپسی کا تقاضا کیا تو اسے کمرے میں بند کر دیا۔اور زبردست 8 لاکھ کی روم چھین لی۔جب کہ جعلی پیروں کا موقف ہے کہ مدعی نے خود نذز نذرانہ کے لئیے 16 لاکھ کی رقم دی تھی۔اور کسی مخالف کو مارنے کے لئیے تعویذ دم کر کے دینے کا کہا جو ہم نے انکار کر دیا۔

اس خبر پر اپنی رائے کا اظہار کریں

اپنا تبصرہ بھیجیں